السبت 12 صفر 1443 هـ
آخر تحديث منذ 2 ساعة 23 دقيقة
×
تغيير اللغة
القائمة
العربية english francais русский Deutsch فارسى اندونيسي اردو Hausa
السبت 12 صفر 1443 هـ آخر تحديث منذ 2 ساعة 23 دقيقة

نموذج طلب الفتوى

لم تنقل الارقام بشكل صحيح
×

لقد تم إرسال السؤال بنجاح. يمكنك مراجعة البريد الوارد خلال 24 ساعة او البريد المزعج؛ رقم الفتوى

×

عفواً يمكنك فقط إرسال طلب فتوى واحد في اليوم.

ہاتھ اور سر میں مہندی لگانے کے ساتھ وضوکرنا

مشاركة هذه الفقرة

ہاتھ اور سر میں مہندی لگانے کے ساتھ وضوکرنا

تاريخ النشر : 20 صفر 1438 هـ - الموافق 21 نوفمبر 2016 م | المشاهدات : 798

ہاتھوں اورسر میں مہندی لگاکر وضو کرنے کا کیا حکم ہے؟

الوضوء مع وجود الحناء فی الید والرأس

اللہ تعالیٰ کی توفیق سے ہم آپ کے سوال کا جواب یہ دیتے ہیں کہ اس پر واجب ہے کہ وہ ہاتھوں پر لگی مہندی کو دھو ڈالے کیونکہ اس سے جلد کو پانی نہیں پہنچتا، اور سر کے بارے میں تو بہت آسان ہے کہ وہ مسح کرے اس لفافے یا کپڑے پر جو سر پر لگاہے یامہندی کے اوپر ہی مسح کرے اور ہاتھوں کو لگی مہندی کو دھوڈالنا واجب ہے ۔

اور جس نے اس فعل کو بہت مرتبہ کیا ہے لیکن مسئلہ کا پتہ نہیں تھاتو ا س پر کوئی قضاء یا کفارہ نہیں ہے لیکن وہ آئندہ اس کا خیال رکھے۔

 

التعليقات (0)

×

هل ترغب فعلا بحذف المواد التي تمت زيارتها ؟؟

نعم؛ حذف