الثلاثاء 15 صفر 1443 هـ
آخر تحديث منذ 7 ساعة 20 دقيقة
×
تغيير اللغة
القائمة
العربية english francais русский Deutsch فارسى اندونيسي اردو Hausa
الثلاثاء 15 صفر 1443 هـ آخر تحديث منذ 7 ساعة 20 دقيقة

السلام عليكم ورحمة الله وبركاته.

الأعضاء الكرام ! اكتمل اليوم نصاب استقبال الفتاوى.

وغدا إن شاء الله تعالى في تمام السادسة صباحا يتم استقبال الفتاوى الجديدة.

ويمكنكم البحث في قسم الفتوى عما تريد الجواب عنه أو الاتصال المباشر

على الشيخ أ.د خالد المصلح على هذا الرقم 00966505147004

من الساعة العاشرة صباحا إلى الواحدة ظهرا 

بارك الله فيكم

إدارة موقع أ.د خالد المصلح

×

لقد تم إرسال السؤال بنجاح. يمكنك مراجعة البريد الوارد خلال 24 ساعة او البريد المزعج؛ رقم الفتوى

×

عفواً يمكنك فقط إرسال طلب فتوى واحد في اليوم.

روزہ دار کیلئے ڈرپ اور( اینما )انجکشن لگوانے کاحکم

مشاركة هذه الفقرة

روزہ دار کیلئے ڈرپ اور( اینما )انجکشن لگوانے کاحکم

تاريخ النشر : 30 جمادى أول 1438 هـ - الموافق 27 فبراير 2017 م | المشاهدات : 1154

محترم جناب ! السلام علیکم ورحمۃ اللہ وبرکاتہ۔۔ کیا ڈرپ اور( اینما )انجکشن کوتھوڑ دیتی ہے ؟

حكم التحاميل والحقن الشرجية للصائم

حامداََ و مصلیاََ۔۔۔

وعلیکم السلام ورحمۃ اللہ وبرکاتہ ۔۔۔

اما بعد۔۔۔

اس کی حقیقت یہ ہے کہ ان کے ذریعے دوامقعد(شرمگاہ) کے ذریعے پیٹ تک پہنچتی ہے ۔اور جمہور فقہاء اپنے مختلف مذاہب کے تحت اس کو ان اشیاء میں شمار کرتے ہیں جن سے روزہ ٹوٹ جاتا ہے، جبکہ بعض اہل تحقیق اس بات کی طرف گئے ہیں کہ جو چیز شرمگاہ کے ذریعے جوف تک پہنچے اس سے روزہ نہیں ٹوٹتا کیونکہ یہ نہ کھانا او رنہ پینا ہے اور نہ ان کے حکم میں ہے۔ اوربعض لوگ جو بعض صورتوں میں ان کے ذریعے غذا کے حصول کی بات کرتے ہیں تو وہ کبھی کبھار ہوتا ہے ، جیسا کہ تغذی کے حکم کو رد نہیں کیا جاسکتا اور اس پر کوئی واضح دلیل نہیں۔ یہی وجہ ہے کہ ہمارے شیخ ابن عثیمین ؒ نے فرمایاجب انہوں نے ( اس بارے میں روزہ نہ توڑنے کاقول کیا)کہنے کے بعد فرمایا کہ :اس کودیکھ کر ہم کہتے ہیں کہ اس سے بالکل روزہ نہیں ٹوٹتااوراگر جسم ان باریک آنتوں کے ذریعے خوراک لے بھی لے تب بھی راجح قول کے مطابق اس مسئلہ میں شیخ الاسلام ابن تیمیہ ؒ کا مطلقاََ قول لیا جائے گا اور بعض معاصرین نے جوبات کی ہے ان کے قول کو بالکل نہیں لیا جاسکتا ۔واللہ تعالیٰ اعلم

آپ کا بھائی

خالد بن عبد الله المصلح

15/08/1428ھ

التعليقات (0)

×

هل ترغب فعلا بحذف المواد التي تمت زيارتها ؟؟

نعم؛ حذف