فتوا فارم کے لئے درخواست

غلط کیپچا
×

بھیجا اور جواب دیا جائے گا

×

افسوس، آپ فی دن ایک فتوی بھی نہیں بھیج سکتے.

حج و عمرہ / میقات سے بغیر احرام کے گزرنا2

میقات سے بغیر احرام کے گزرنا2

تاریخ شائع کریں : 2016-09-07 | مناظر : 1064
- Aa +

ایک آدمی اپنے کسی کام سے میقات سے بغیر احرام کے گزر کر جدہ شہر گیا، جبکہ میقات سے گزرتے ہوئے اس کی نیت تھی کہ اپنے کام سے فارغ ہوکر عمرہ ادا کرے گا اور وہ کسی مجبوری کی تحت عمرہ کو کام پر مقدم بھی نہیں کرسکتا تھا ایسے شخص کے لئے شرعیت کا کیا حکم ہے؟

تجاوز الميقات دون الإحرام2

اما بعد۔

اس کے لئے واجب تھا کہ میقات سے گزرتے ہوئے وہ حالتِ احرام میں گزرتا اور عمرہ ادا کرتا ، اور اگر وہ جدّہ سے احرام باندھ کر عمرہ کرتا ہے تو جمہور علماء کے نزدیک میقات سے بغیر احرام گزرنے کی وجہ سے اس پر دم لازم آتا ہے اور فدیہ میں ایک بکری دینی ہوگی۔ واللہ أعلم بالصواب۔

خالد المصلح

13/ 11 /1424هـ

×

کیا آپ واقعی ان اشیاء کو حذف کرنا چاہتے ہیں جو آپ نے ملاحظہ کیا ہے؟

ہاں، حذف کریں