فتوا فارم کے لئے درخواست

غلط کیپچا
×

بھیجا اور جواب دیا جائے گا

×

افسوس، آپ فی دن ایک فتوی بھی نہیں بھیج سکتے.

الحديث / ایک حدیث کے بارے میں سوال

ایک حدیث کے بارے میں سوال

تاریخ شائع کریں : 2017-01-27 | مناظر : 1232
EN
- Aa +

درجہ ذیل حدیث کی کیا صحت ہے: صیامکم و نحرکم و راس سنتکم الھجریۃ فی یوم واحد ’’ایک دن میں تمہارے روزے اور تمہاری قربانی اور تمہارے ہجری سال کی ابتداء‘‘۔

سؤال عن حديث

حامداََ و مصلیاََ۔۔۔

اما بعد۔۔۔

اس مشہور حدیث کے الفاظ یہ نہیں ہیں بلکہ اصل الفاظ یہ ہیں :  ’’تمہارے روزے کا دن اور تمہاری قربانی کا دن‘‘۔  اور ایک جگہ ان الفاظ کے ساتھ مروی ہے:  تمارے سال کی ابتداء کا دن۔  بہر کیف  !  امام احمدؒ وغیرہ کے نزدیک اس حدیث کی کوئی اصل نہیں ہے لہٰذا یہ آپسے ثابت نہیں ہے

متعلقہ موضوعات

ملاحظہ شدہ موضوعات

×

کیا آپ واقعی ان اشیاء کو حذف کرنا چاہتے ہیں جو آپ نے ملاحظہ کیا ہے؟

ہاں، حذف کریں