فتوا فارم کے لئے درخواست

غلط کیپچا
×

بھیجا اور جواب دیا جائے گا

×

افسوس، آپ فی دن ایک فتوی بھی نہیں بھیج سکتے.

​زکوٰۃ / پچھلے تمام سالوں کی یکمشت زکوٰۃ ادا کرنا

پچھلے تمام سالوں کی یکمشت زکوٰۃ ادا کرنا

تاریخ شائع کریں : 2017-05-18 | مناظر : 1165
- Aa +

جناب من میرا پہلا سوال یہ ہے کہ ایک عورت کے پاس اتنا سونا چاندی ہے جس کی مقدار نصاب ِزکوٰۃ کو پہنچ گئی ہے ، نہ اس نے کئی سالوں کی زکوٰۃ ادا کی ہے اور نہ ہی زکوٰۃ ادا کرنے والے سالوں کی تعداد کا اسے علم ہے ، لہٰذا اب اسے کیا کرنا چاہئے ؟ اورمیرا دوسرا سوال یہ ہے کہ ایک تنخوادار آدمی کو ایک لمبے عرصے کے لئے جیل ہوگئی تھی اب اسے جیل سے رہائی ہوگئی ہے ، اور جیل سے رہا ہونے کے بعد اس نے تمام سالوں کی تنخواہ یکمشت لے لی تو کیا اب اس پر ان تمام سالوں کی زکوٰۃ واجب ہے ؟

زكاة السنوات الماضية

حمدوثناء کے بعد۔۔۔

پہلا جواب: اسے چاہئے کہ وہ پچھلے تمام سالوں اور سونے کی قیمت کا اندازہ لگا کر پچھلے تمام سالوں کی زکوٰۃ ادا کرلے ۔

دوسرا جواب: اگر وہ تنخواہ اس کے اکاؤنٹ میں ماہانہ داخل ہوتی رہی تو وہ ان پچھلے تمام سالوں کی زکوٰۃ ادا کرلے ، اور اگر جیل سے رہائی کے بعد اسے یکمشت ملی ہے تو اہل علم کی ایک بڑی جماعت کے نزدیک اس پر صرف ایک سال کی زکوٰۃ واجب ہے

×

کیا آپ واقعی ان اشیاء کو حذف کرنا چاہتے ہیں جو آپ نے ملاحظہ کیا ہے؟

ہاں، حذف کریں