فتوا فارم کے لئے درخواست

غلط کیپچا
×

بھیجا اور جواب دیا جائے گا

×

افسوس، آپ فی دن ایک فتوی بھی نہیں بھیج سکتے.

لباس اور زینت / ضرورت کے لئے عورت کا اپنے جسم کے کسی حصہ کو ظاہر کرنا

ضرورت کے لئے عورت کا اپنے جسم کے کسی حصہ کو ظاہر کرنا

تاریخ شائع کریں : 2017-05-20 | مناظر : 1058
- Aa +

جناب مآب السلام علیکم ورحمۃ اللہ وبرکاتہ! میں ایک مخلوط ہاسپٹل میں بطور نرس کے نوکری کرتی ہوں ، اور اپنی مقدور بھر کوشش کرتی ہوں کہ مردوں سے دور رہوں لیکن بسا اوقات اثنائے عمل ان کے لئے ہاتھ ظاہر کرنے کی مجبوری پڑجاتی ہے کیا اس طرح میں گناہگار ہوں گی؟

كشف المرأة لشيء من جسدها للحاجة

حمد و ثناء کے بعد۔۔۔

وعلیکم السلام ورحمۃ اللہ وبرکاتہ۔

اگر فتنہ کا اندیشہ نہ ہو تو تو بوقتِ ضرورت عورت کے لئے اپنے جسم کا کوئی حصہ ظاہر کرنا جائز ہے ، اس لئے اگر فتنہ کا اندیشہ نہ ہو تو لیڈی ڈاکٹر یا نرس کے لئے بقدرِ حاجت جسم کا کوئی حصہ ظاہر کرنے میں کوئی ممانعت نہیں ، لیکن پھر بھی اپنی طرف سے حتی الامکان اجتناب کی کوشش ہو اس لئے کہ شیطان انسان کے رگوں میں خون کی طرح گردش کرتا ہے ۔

آپ کا بھائی/

أ.د.خالد المصلح

19/ 10 /1428هـ

×

کیا آپ واقعی ان اشیاء کو حذف کرنا چاہتے ہیں جو آپ نے ملاحظہ کیا ہے؟

ہاں، حذف کریں