×
العربية english francais русский Deutsch فارسى اندونيسي اردو

خدا کی سلام، رحمت اور برکتیں.

پیارے اراکین! آج فتوے حاصل کرنے کے قورم مکمل ہو چکا ہے.

کل، خدا تعجب، 6 بجے، نئے فتوے موصول ہوں گے.

آپ فاٹاوا سیکشن تلاش کرسکتے ہیں جو آپ جواب دینا چاہتے ہیں یا براہ راست رابطہ کریں

شیخ ڈاکٹر خالد الاسلام پر اس نمبر پر 00966505147004

10 بجے سے 1 بجے

خدا آپ کو برکت دیتا ہے

فتاوی جات / شریعت اور سیاست / میں نے راستے میں کار سے ایک بکری کے بچے کو مارا اس سے مجھ پر کیا کفارہ لازم آئے گا؟

اس پیراگراف کا اشتراک کریں WhatsApp Messenger LinkedIn Facebook Twitter Pinterest AddThis

تاریخ شائع کریں:2017-05-20 03:00 PM | مناظر:1639
- Aa +

ایک ہائی-وے پر کار چلاتے ہوئے اچانک میرے سامنے ایک بکریوں کا ریوڑ آیا جس میں ایک بکری کا بچہ میری کار سے ٹکرایا اب یہ مجھے نہیں پتہ کہ وہ مر گیا یا اس کی ہڈی پسلی ٹوٹی ، اور میں کار تیز کرکے وہاں سے رفوچکر ہوگیا اور ایک لمحہ کے لئے بھی نہیں رکا، لہٰذا اب مجھ پر کیا کفارہ آئے گا؟

صدمت ماعزا في الخط السريع، فماذا عليّ؟

جواب

حمد و ثناء کے بعد۔۔۔

بتوفیقِ الٰہی آپ کے سوال جواب پیشِ خدمت ہے:

اگر اس ہائی-وے کے دائیں بائیں کنڈک تار یا باڑ لگی ہو جو چرواہوں کو اس روڈ کے پاس قریب جانے سے منع کرتی ہو تو پھر آپ پر کوئی کفارہ واجب نہیں ہے


آپ چاہیں گے

ملاحظہ شدہ موضوعات

1.

×

کیا آپ واقعی ان اشیاء کو حذف کرنا چاہتے ہیں جو آپ نے ملاحظہ کیا ہے؟

ہاں، حذف کریں