فتوا فارم کے لئے درخواست

غلط کیپچا
×

بھیجا اور جواب دیا جائے گا

×

افسوس، آپ فی دن ایک فتوی بھی نہیں بھیج سکتے.

​​قربانی کے مسائل / عید کی رات قربانی کرنا

عید کی رات قربانی کرنا

تاریخ شائع کریں : 2017-05-21 | مناظر : 1656
- Aa +

کیا ذوالحجہ کی نو تاریخ کو مغرب کے بعد عید کی رات قربانی کرنا جائز ہے؟

ذبح الأضحية ليلة العيد

حمد و ثناء کے بعد۔۔۔

 بتوفیقِ الٰہی آپ کے سوال کا جواب پیشِ خدمت ہے:

اہل علم کا اس بات پر اجماع ہے کہ طلوع فجر سے پہلے قربانی جائز نہیں ہے ، اس میں ان کا کوئی اختلا ف نہیں ہے ، صحیح بخاری {۵۵۰۰} و مسلم {۱۹۶۰} میں حضرت جندب بن سفیان بجلی کی حدیث میں ہے کہ آپنے نماز سے پہلے کچھ بکریاں ذبح ہوتے دیکھیں تو ارشاد فرمایا: ’’جس نے بھی نماز سے پہلے قربانی کی ہے تو وہ اس کی جگہ دوسری قربانی کرلے‘‘۔

 اس طرح حضرت انس اور براء بن عاز ب سے بھی منقول ہے ۔

آپ کا بھائی/

خالد المصلح

13/01/1425هـ

×

کیا آپ واقعی ان اشیاء کو حذف کرنا چاہتے ہیں جو آپ نے ملاحظہ کیا ہے؟

ہاں، حذف کریں