فتوا فارم کے لئے درخواست

غلط کیپچا
×

بھیجا اور جواب دیا جائے گا

×

افسوس، آپ فی دن ایک فتوی بھی نہیں بھیج سکتے.

القضاء والشهادات / اپنا حق حاصل کرنے کے لئے رشوت دینا

اپنا حق حاصل کرنے کے لئے رشوت دینا

تاریخ شائع کریں : 2017-05-23 | مناظر : 961
- Aa +

میرا کچھ مال ہے اور میں امپورٹ/اکسپورٹ کا کام کرنا چاہتا ہوں ، لیکن جزائر میں جو شخص بھی اس سلسلے میں کام کرنا چاہتا ہے تو اس کو رشوت دینا لازمی ہوتا ہے ، اور اس کے ساتھ بلوں میں جھوٹ سے بھی کام لینا پڑتا ہے ، لہٰذا اس میں شرعیت کا کیا حکم ہے؟ اللہ آپ کو جزائے خیر عطا فرمائے

هل أدفع الرشوة لتحصيل حقي؟

حمد و ثناء کے بعد۔۔۔

 آپ کے سوال کا جواب پیشِ خدمت ہے:

جہاں تک آپ کا اپنے حق کو لینے کے لئے رشوت دینے کا سوال ہے تو وہ آپ کے لئے جائز ہے اور اس میں آپ پر کوئی گناہ بھی نہیں ہے ، گناہ اس شخص پر ہوگا جو جس نے آپ کا حق روک کر آپ کو رشوت دینے پر مجبور کیا ہے ، باقی رہی جھوٹ کی بات تو میرے خیا ل میں یہ جائز نہیں ہے ہاں البتہ اگر توریہ سے کام لیا جائے تو پھر جائز ہے ۔

آپ کا بھائی/

خالد المصلح

11/11/1424هـ

×

کیا آپ واقعی ان اشیاء کو حذف کرنا چاہتے ہیں جو آپ نے ملاحظہ کیا ہے؟

ہاں، حذف کریں