فتوا فارم کے لئے درخواست

غلط کیپچا
×

بھیجا اور جواب دیا جائے گا

×

افسوس، آپ فی دن ایک فتوی بھی نہیں بھیج سکتے.

العقيدة / حکمرانوں کو کافر کہنا

حکمرانوں کو کافر کہنا

تاریخ شائع کریں : 2016-11-22 07:16 AM | مناظر : 1061
- Aa +

سوال

میری بعض سہیلیاں یہ کہتی ہیں کہ جب کبھی بھی حکمرانوں میں سے کوئی شخص کوئی ایسا فیصلہ کرے گا جو اللہ تعالیٰ کی شریعت کے خلاف ہوگاتو وہ حکمران کافر ہوگا جیسا کہ قرآن میں بھی وارد ہے ، میرے پاس ان کے رد میں کوئی جواب نہیں اور نہ مجھے یہ علم ہے کہ کس طرح اس خطا ء سے اپنے آپ کوبچاؤں؟

تكفير الحكام

جواب

امابعد۔۔۔

حکمرانوں کو مطلقاََ کافر کہنا یہ گمراہ خوارج کا شیوہ ہے اور اس طرح عوام الناس میں سے کسی کو کافر کہنا ۔ تکفیر کے مسئلے میں تحمل سے کام لیا جاتاہے نہ کہ جلد بازی سے ۔ اس میں دو امور کو سامنے رکھا جاتا ہے پہلے اس شخص کا فعل جو اس نے کیا ہے وہ واقعی کافر بنانے والا ہو ۔

دوسرا یہ کہ کفر کے تمام شروط پائے جائیں اور اس شخص اور کفر کے درمیان موانع ختم ہوجائیں پھر اس پر کفر کا حکم لگے گا

آپ چاہیں گے

ملاحظہ شدہ موضوعات

×

کیا آپ واقعی ان اشیاء کو حذف کرنا چاہتے ہیں جو آپ نے ملاحظہ کیا ہے؟

ہاں، حذف کریں