فتوا فارم کے لئے درخواست

غلط کیپچا
×

بھیجا اور جواب دیا جائے گا

×

افسوس، آپ فی دن ایک فتوی بھی نہیں بھیج سکتے.

طھارت / نفاس میں چالیس دن سے زیادہ ہوگئے ہیں اور ابھی تک پاکی حاصل نہیں ہوئی تو ایسی صورت میں کیا کرنا چاہئے ؟

نفاس میں چالیس دن سے زیادہ ہوگئے ہیں اور ابھی تک پاکی حاصل نہیں ہوئی تو ایسی صورت میں کیا کرنا چاہئے ؟

تاریخ شائع کریں : 2016-11-22 02:11 PM | مناظر : 699
- Aa +

سوال

ایک عورت کو نفاس میں چالیس دن گزر گئے اور ابھی تک پاکی نہیں دیکھی لیکن یہ خون نفاس کے خون کی طرح نہیں ہے مطلب اس میں ملاوٹ اور گدلا پن ہے تو کیا اس کو نفاس تصور کیا جائے گا (نفا س کے ساتھ جڑنے کی وجہ سے اور پاکی نہ پانے کی وجہ سے )یا وہ مستحاضہ ہوگی چالیس دن سے زیادہ ہونے کی وجہ سے ؟ہمیں رائے راجح دلیل کے ساتھ چاہئے ۔اللہ تعالیٰ آپ کو برکت دے اور آپ کے علم میں برکت ڈالے اور آپ سے نفع پہنچائے

جاوزت الأربعين في النفاس، ولم تر الطهر بعد، ماذا تفعل؟

جواب

اللہ کی توفیق سے ہم آپ کے سوال کے جواب میں کہتے ہیں :اگر یہ گدلا پن دم نفاس کے ساتھ متصل ہو تو میر ی رائے ہے کہ آپ انتظار کریں یہاں تک کہ وہ بند ہوجائے اور اگر وہ چالیس دن سے تجاوز کرے تو پھر جو نفاس کے ساتھ متصل نہ ہو تویہ خون کے بند ہونے سے پاکی حاصل کرلے گی۔

ملاحظہ شدہ موضوعات

×

کیا آپ واقعی ان اشیاء کو حذف کرنا چاہتے ہیں جو آپ نے ملاحظہ کیا ہے؟

ہاں، حذف کریں